یہ کون لوگ ہیں؟

سماج کہانی|زاہد نثار

یہ بریکنگ نیوز نہیں ہے!!!

سماج کہانی|زاہد نثار


یہ کون لوگ ہیں؟؟
تازہ ترین اطلاعات کے مطابق
جیسے کوئی موٹر سائیکل یا کار ان کے پاس آکر رکتی ہے تو یہ اسے گھیر لیتے ہیں
لیکن بزدل بھی ہیں شاید …..
کسی پر حملہ آور بھی نہیں ہوتے
ابھی تک معلوم نہیں ہو سکا کہ کس کے خلاف یہ مسلح ہوکر روز شہر کا رخ کرتے ہیں
دیکھا گیا ہے کہ ان میں کوئی شیعہ سنی کی تفریق نہیں!!
دستیاب معلومات کے مطابق ان میں سندھی، سرائیکی، پنجابی، بلوچی یا پشتو زبان کا مسئلہ نہیں ہے
کسی نے اب تک نعرے بازی کرتے ان کو نہیں دیکھا
کئی سالوں سے روزمنہ اندھیرے یہاں جمع ہوتے ہیں
پراسرار طور پر عین دن کے دس بجے تک یہ غائب ہو جاتے ہیں
ہو نہ ہو یہ کسی غیر ملکی ایجنڈے پر کام کرنے کےلیے جمع ہوتے ہیں
شاید ان کا بس نہیں چلتا
پھر بھی…….
یقیناً یہ دہشت گرد ہیں!!
لیکن……
یہ بریکنگ نیوز نہیں ہے
یہ ہیں کون؟؟
پکی بات ہے!!
……دہشت گرد ہیں…..
چہرے دیکھیں…….
مایوسی، غصے، احساس کمتری، جھنجھلاہٹ اور حقارت کے مارے چہرے
یہی علامات ہیں ناں دہشت گردوں کی؟
ان کو قانون کے حوالے کیوں نہیں کرتے؟
وجہ؟؟
یہ بریکنگ نیوز نہیں ہے!!!
یہ اتنے سارے مسلح لوگ؟
مقامی ذرائع کے مطابق
کسی کے ہاتھ میں کدال ہے جس سے وہ روز اپنی بھوک کا قتل کرنے شہر کا رخ کرتا ہے
کسی نے پھاؤڑا اٹھایا ہوا ہے جس سے اس نے اپنی محرومی کی قبر کھودنی ہے
کوئی سمبل اٹھائے ہوئے ہے.امکان یہی ہے کہ غربت کا سر پھوڑنے کا جنون اس کے سر پر سوار ہے
اطلاعات ہیں کہ یہ بے گھر بھی نہیں ہیں
بال بچوں والے بھی ہیں
مصدقہ ذرائع یہ بھی بتاتے ہیں کہ یہ چند سو کے لیے کچھ بھی کر سکتے ہیں.
مگر……
یہ بریکنگ نیوز نہیں ہے!!!
عینی شاہدین کے مطابق
تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال صادق آباد کو گھیرے ہوئے نامعلوم لوگ……
…….مزدور ہیں ……

مقامی نمائندہ و رہائشی
موٹر سائیکل پر سوار
میاں عبدالمنان
دور سے کیمرہ مین
زاہد نثار

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے