کوٹ سبزل چیک پوسٹ سمگلنگ کا گیٹ وے

چیک پوسٹ پر گاڑیوں سے رشوت وصولی پر 14اہلکار گرفتار

رپورٹنگ ٹیم|منگل08جنوری2019

صادق آباد: سندھ پنجاب بارڈر کوٹ سبزل چیک پوسٹ پر پولیس کی بڑی کرپشن پکڑی گئی،ضلعی پولیس افسروں نے خود کو بچانے کے لیے 14اہلکاروں کو گرفتار کرکے حوالات میں بندکردیا۔پنجاب کے آخری تھانے کوٹ سبزل کی حدود سندھ پنجاب بارڈر کوٹ سبزل چیک پوسٹ پر تعینات پولیس اہلکاروں اور رضا کاروں نے رشوت کا بازار گرم کررکھا تھا اور وردی اور اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوۓ قومی شاہراہ پر قائم چیک پوسٹ سے گزرنے والی گاڑیوں سے سرعام رشوت وصول کی جارہی تھی۔ذرائع کے مطابق یہ سلسلہ کئی برسوں سے جاری ہے اور پولیس کے بعض اعلی افسروں کو بھی مبینہ طور پر ”حصہ“ پہنچتا تھا جس کی وجہ سے اہلکاروں کو رشوت وصول کرنے کی کھلی چھوٹ ملی ہوئی تھی۔
سندھ پنجاب بارڈر پر تعینات کوٹ سبزل چیک پوسٹ کا عملہ مٹھی گرم کرکے گاڑیوں کو بغیر چیکنگ کے سندھ جانے دیتا اور اسی طرح سندھ سے پنجاب آنے والی گڈز اور مسافر ٹرانسپورٹ کی بھی چیکنگ نہیں کی جاتی تھی۔یہ اہم چیک پوسٹ سمگل شدہ سامان اور اشیاء کی بین الصوبائی ترسیل کا گیٹ وے بنی ہوئی تھی۔ٹرانسپورٹرز اور سمگلر چیک پوسٹ کے عملے کو رشوت دے کر سمگل شدہ اشیاء باآسانی پنجاب سے سندھ بلوچستان اور سندھ سے پنجاب پہنچا رہے تھے۔معلوم ہوا ہے کہ چیک پوسٹ پر پابندی کے باوجود رضا کار بھی تعینات کیے گئے تھے۔
شکایات ملنے پر اے ایس پی صادق آباد نے انکوائری کی تو چیک پوسٹ عملے کی رشوت خوری کھل کر سامنے آگئی جس پر انہوں نے ایکشن لیتے ہوۓ کوٹ سبزل چیک پوسٹ کے پورے عملے کو حوالات میں بند کردیاہے۔کوٹ سبزل پولیس سٹیشن میں رضاکاروں سمیت 14پولیس ملازمین کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔دوسری طرف شہریوں نے آئی جی پنجاب پولیس امجد جاوید سلیمی سے مطالبہ کیا ہے کہ سمگلنگ میں سہولت کاروں کا کردارادا کرنےوالے پولیس اہلکاروں کے خلاف سخت قانونی کارروائی عمل میں لائی جاۓ اور ان کی درپردہ سرپرستی کرنے والے پولیس افسروں کو بھی بے نقاب کیا جاۓ۔ادھر ٹرانسپورٹرز کا کہنا ہے کہ کوٹ سبزل چیک پوسٹ کا عملہ جیب گرم کیے بغیر گاڑیوں کو گزرنے نہیں دیتا۔اہلکار وردی اور اختیارات کا ناجائز استعمال کرکے ڈرائیوروں کو ڈرا دھمکا کر بھتہ وصول کرتے ہیں لیکن انہیں کوئی پوچھنے والا نہیں۔واضح رہے کہ صادق آباد اور ضلع رحیم یارخان میں سمگل شدہ ایرانی پیٹرول،کپڑے اور دیگر مصنوعات اسی چیک پوسٹ کے راستے صادق آباد پہنچتی ہیں۔جبکہ پنجاب سے سامان بلوچستان اور افغانستان اسی راستے سے سمگل ہورہا ہے۔دعوالہ چیک پوسٹ بھی رشوت کا بازار گرم ہے۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے