وزیراعلی،آئی جی پولیس مصافحہ،تصویر کا دوسرا رخ

عثمان بزدار نے پلٹ کر آئی جی امجد سلیمی سے مصافحہ کیا اور مسکراۓ بھی

وزیراعلی اور آئی جی پنجاب پولیس کا مصافحہ،تصویر کا اصل رخ

لاہور: وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار اور آئی جی پنجاب پولیس امجد سلیمی کی ایک ویڈیو اور اس کا سکرین شارٹ کل سے سوشل میڈیا پر وائرل ہے۔
جس میں دیکھا جا سکتا ہے کہ ملتان میں تقریب کے دوران آئی جی پنجاب پولیس پہلے وزیراعلیٰ عثمان بزدار سے شیلڈ وصول کرتے ہیں اور دونوں کیمرہ مین کی جانب دیکھتے ہوئے سمائل دیتے ہیں۔ پھر شیلڈ پیچھے کھڑے افسران کو تھمائی جاتی ہے ۔ اسی دوران آئی جی پولیس وزیراعلیٰ سے مصافحہ کے لیے ہاتھ بڑھاتے ہیں تو وزیراعلیٰ منہ پھیر کر چل بنتے ہیں۔آئی جی پولیس اپنا ہوا میں معلق ہاتھ لے کر دو قدم آگے تک جاتے ہیں لیکن وزیراعلیٰ قطعی بے خبری میں آگے نکل جاتے ہیں۔ یہ منظر ہے ، جو پہلی نظر میں سمجھ میں آتا ہے۔

تاہم بعد میں وزیراعلی معاملے کو بھانپ کر فوری جوابا ہاتھ بڑھا کر آئی جی پنجاب پولیس سے سمائل کے ساتھ مصافحہ کرتے ہیں۔

سوشل میڈیا اور ٹی وی چینلز پر تصویر کا پہلا رخ دکھا کر اب یہ ”چسکے دار مال” خوب بِک رہا ہے ۔سینئر صحافی اور تجزیہ نگار فرحان احمد خان نے اس ویڈیو پر تبصرہ کرتے ہوۓ کہا کہ انہیں نہیں لگتا کہ بُزدار نے جان بوجھ کر پولیس افسر کو نظرانداز کیا یا اس کی تذلیل کی ۔اگر ایسا ہوتا تو وزیراعلیٰ اس تقریب ہی میں نہ آتے،چیف ایگزیکٹو ہونے کے ناتے اس کا اختیار بھی انہیں حاصل ہے، مجھے لگتا ہے اس لمحے سیچوئشن ایسی بنی کہ شلیڈ دینے کے بعد عثمان بزدار کو لگا کہ کام مکمل ہو گیا ہے، سو وہ پلٹ گئے۔
ہاں وزیراعلیٰ کے سٹاف کی یہ کمزوری ضرور ہے کہ انہیں سرکاری تقریبات کی ثقافت سے پوری طرح آگاہ نہیں کیا گیا۔ یہ کمزوری وزیراعظم عمران خان کے سٹاف کے ہاں بھی پائی جاتی ہے۔ ایوارڈز وغیرہ کی تقریبات میں سند ، سوینئر یا شیلڈ وصول کرتے ہوئے مصافحہ کیا جاتا ہے۔ اس کی بھی تصویر بنتی ہے۔ یہاں شیلڈ ٹائپ چیز کافی بڑی تھی ، آئی جی اور وزیراعلیٰ کے دونوں ہاتھ برابر مصروف تھے ۔ آئی جی سرکاری افسر ہیں ، ایسی تقریبات کے لوازامات سے واقف ہیں، سو انہوں نے بعد میں مصافحہ کی کوشش کی لیکن بزدار نے اُس کا انتظار نہ کیا۔ بس اتنی سی بات تھی جس کے فسانے بن رہے ہیں۔
ادھر اب سوشل میڈیا پر ایسی ہی ایک ویڈیو بھی وائرل ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ وزیراعلی نے چند قدم چلنے کے بعد پلٹ کر اپنا ہاتھ آگے بڑھاتے ہوۓ آئی جی کے ساتھ مصافحہ کیا اور مسکراۓ بھی۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے