پاکستان سکیورٹی اور استحکام کے معاملے میں سعودی عرب کے ساتھ کھڑا ہے:عمران خان

ویب ڈیسک | اتوار 17فروری 2019

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کی پاکستان آمد کے حوالے سے کہا ہے کہ سعودی ولی عہد کے دورے کا اصل مقصد دونوں ممالک کے درمیان دو طرفہ معاشی تعلقات کو مزید مضبوط کرنا ہے۔
ریڈیو پاکستان نے سعودی اخبار میں شائع رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم کے مطابق دورے کے دوران محمد بن سلمان پاکستان میں آئل ریفائنری کے قیام میں سرمایہ کاری کے لیے ایک یادداشت پر دستخط کریں گے، جو پاکستان کی تاریخ میں سعودی عرب کی سب سے بڑی سرمایہ کاری ہوگی۔وزیراعظم کا کہنا تھا کہ دونوں ممالک فلسطین اور کشمیر کے تنازعات پر بین الاقوامی برادری کی توجہ حاصل کرنے کے لیے ساتھ مل کر کام کرسکتے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ دونوں اسلامی برادر ممالک افغانستان میں امن کے قیام کے لیے اہم کردار ادا کرسکتے ہیں، اس کے علاوہ دونوں ممالک اسلامی تعاون کی تنظیم کے پلیٹ فارم کے ذریعے مسلم اُمہ کو مضبوط کرسکتے ہیں۔ایک سوال کے جواب میں وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ سعودی عرب ہر طرح سے ہمارے دلوں کے قریب ہے اور پاکستان کسی کو بھی سعودی عرب پر حملے کی اجازت نہیں دے گا۔ان کا کہنا تھا کہ پاکستان ہمیشہ سیکیورٹی اور استحکام کے معاملے میں سعودی عرب کے ساتھ کھڑا ہے۔خیال رہے کہ سعودی ولی عہد محمد بن سلمان آج پاکستان کے دورے پر اسلام آباد آرہے ہیں جس کی وجہ سے اسلام آباد اور گرد و نواح کے علاقوں میں سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے ہیں۔وزیر اعظم عمران خان کی دعوت پر پاکستان کا دورہ کرنے والے ولی عہد کے راولپنڈی کے نور خان ایئر باس آمد پر ان کے شاندار استقبال کی تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں جبکہ انہیں وزیر اعظم ہاؤس میں گارڈ آف آنر بھی پیش کیا جائے گا۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے