نیشنل کمانڈاتھارٹی کا اجلاس، بھارت کودراندازی کا جواب دینے کے لیے اہم فیصلے

ویب ڈیسک : اپ ڈیٹ 27 فروری 2019

اسلام آباد : وزیراعظم نے نیشنل کمانڈاتھارٹی کے اجلاس میں ایک بار پھر آرمڈ فورسز کے فوری ایکشن کی تعریف کرتے ہوئے حالات مزید کشیدہ ہونے پر اظہارتشویش کیا جبکہ بھارت کودراندازی کا جواب دینے کے لیے اہم فیصلے کئے گئے۔
تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت نیشنل کمانڈاتھارٹی کااجلاس وزیراعظم آفس میں ہوا، اجلاس میں تینوں مسلح افواج کے سربراہان، چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی،سروسز چیفس اور دیگرحکام شریک ہوئے جبکہ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی ، وزیر دفاع پرویز خٹک ، وزیر خزانہ اسد عمر اور دفاعی پیداوار کے حکام بھی موجودتھے۔
اجلاس میں کمانڈ اتھارٹی کے ممبر وزرا، ڈی جی آئی ایس آئی میجر جنرل آصف غفور ، ڈی جی ایس پی ڈی بھی شریک تھے۔
اجلاس میں ملکی سلامتی اور جوہری صلاحیت سےمتعلق امور تبادلہ خیال کیا گیا اور بھارت کی جانب سے فضائی دراندازی سے پیدا ہونے والی صورتحال پر زیر غور آئی۔نیشنل کمانڈاتھارٹی کے اجلاس میں وزیراعظم کوبروقت ری ایکشن پربریفنگ دی گئی اور بھارتی طیاروں کی دراندازی کی متعددکوششوں سے آگاہ کیاگیا۔
ذرائع کے مطابق وزیراعظم نے ایک بار پھر آرمڈ فورسز کے فوری ایکشن کی تعریف کی اور حالات مزید کشیدہ ہونے پر اظہارتشویش کیا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ اجلاس میں بھارت کودراندازی کا جواب دینے کے لیے اہم فیصلے کئے گئے لیکن فیصلوں پر عملدرآمد سے پہلے وزیراعظم نے قوم کو اعتماد میں لینے کا فیصلہ کیا۔
ذرائع کے مطابق امن کی خاطر مذاکرات کا آپشن بطور آخری وارننگ استعمال کئے جانے کا امکان ہے جبکہ بھارتی ہٹ دھرمی کے نتیجے میں غیرمعمولی فیصلوں پر عملدرآمد ہوگا۔
دوسری جانب قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس آج دوسرے روز بھی وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت جاری رہے گا جب کہ بھارتی جارحیت کے خلاف پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس کل ہوگا۔
خیال رہے وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت نیشنل کمانڈ اتھارٹی کا پہلا اجلاس تھا ، سروسز چیف نے نیشنل کمانڈ اتھارٹی کا اجلاس بلانے کی تجویز دی تھی۔
یاد رہے گذشتہ روز بھارتی دراندازی کے بعد وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت قومی سلامتی سے متعلق اجلاس ہوا تھا ، جس میں وزیراعظم نے پاک فضائیہ کے بروقت ایکشن کی تعریف کرتے ہوئے پاک فوج اور عوام کو تیار رہنے کی ہدایت کی تھی اور کہا تھا جوابی کارروائی کیلئے پاکستان وقت اور جگہ کا انتخاب خود کرے گا۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے