وزیراعظم کا قوم سے خطاب، بھارت کوایک بار پھر مذاکرات کی پیشکش

ویب ڈیسک : اپ ڈیٹ 27 فروری 2019

اسلام آباد : وزیراعظم عمران‌ خان نے بھارت کوایک بار پھر مذاکرات کی پیشکش کرتے ہوئے کہا جنگ کسی بھی مسئلےکاحل نہیں، بیٹھ کربات چیت سےمسائل حل کرنے چاہئیں، جارحیت کی توجواب دیناہماری مجبوری ہوگی۔
وزیراعظم عمران‌ خان نے قوم سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارت کوپیغام دیاکہ آپ دراندازی کرسکتےہیں توہم بھی کرسکتےہیں، ہم نےبھارت کوکہاہم تیار بیٹھے ہیں پھر بھی ایسی حرکت کی گئی۔

Prime Minister Imran Khan’s address on the current situation 🇵🇰🇵🇰 #PMIK

Posted by Imran Khan (official) on Wednesday, February 27, 2019

وزیراعظم عمران‌ خان نے کہا کل سےجوصورتحال ہےچاہتاتھا قوم کواعتمادمیں لوں ، پلواما حملے کے بعد بھارت کوتحقیقات میں مدد کی پیشکش کی اور بھارت کوکہاان کےپاس ثبوت ہیں تودیں۔
وزیراعظم کا کہنا تھا کہ بھارت کوآفرکی تھی کسی طرح بھی تحقیقات چاہتےہیں تعاون کیلئےتیارہیں، پاکستان کےمفادمیں نہیں کہ ہماری سرزمین استعمال کی جائے، ہم بھارت سےمکمل تعاون کیلئےتیارتھے، خدشہ تھا اس کے باوجود بھارت کوئی ایکشن لےگا۔عمران خان نے کہا بھارت کوکہاتھاجارحیت کی توجواب دیناہماری مجبوری ہوگی، یہ کسی کواجازت نہیں کہ وکیل اورجج وہ خودبن جائے،
بھارت کواسی لیےکہا ہمیں اپنےدفاع میں جوابی کارروائی کرناہوگی۔ان کا کہنا تھا کہ کل اس لیےایکشن نہیں لیاکہ ہمیں نقصان کااندازہ نہیں تھا، ہم ایکشن لےکربھارت کانقصان کرسکتےتھے، آج ہم نےجوابی کارروائی کی،کوئی جانی نقصان نہیں کیا، بھارت کوپیغام دیاکہ آپ دراندازی کرسکتےہیں توہم بھی کرسکتےہیں۔
وزیراعظم نے کہا بھارتی طیاروں نےایل اوسی کراس کیاتوانہیں شوٹ ڈاؤن کیا، بھارت کےکچھ پائلٹس پاکستان کی حراست میں ہیں۔عمران خان کا کہنا تھا کہ جنگ کسی بھی مسئلےکاحل نہیں، ورلڈوارٹوکچھ ماہ میں ختم ہونی تھی لیکن6سال لگ گئے، دہشت گردی کےخلاف جنگ بھی طویل عرصےسےجاری ہے، جوہتھیارآپ کےپاس ہیں اورہمارےپاس ہیں کیااس کاغلط استعمال ہونےدےسکتےہیں۔انھوں نے مزید کہا ہم نےبھارت کوکہاہم تیاربیٹھےہیں پھربھی ایسی حرکت کی گئی۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے