کرائسٹ چرچ دہشتگردی:وزیر اعظم کا شہید نعیم رشید کیلئے قومی ایوارڈ کا اعلان

ویب ڈیسک : اتوار17مارچ 2019
اسلام آباد: وزیراعظم پاکستان عمران خان نے مسجد پر دہشت گرد حملے کے دوران بے مثال بہادری کا مظاہرہ کرتے ہوئے جان کا نذرانہ پیش کرنے والے پاکستانی نعیم رشید کو قومی ایوارڈ دینے کا اعلان کیا ہے ۔عمران خان نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کیا ہے کہ پاکستان کو نعیم راشد پر فخر ہے جو متعصب سفید فام دہشت گرد کو روکنے کی کوشش میں شہید ہوئے۔وزیراعظم نے کہا کہ ہم کرائسٹ چرچ دہشت گرد حملے کے متاثرہ پاکستانی خاندانوں کے ساتھ ہیں۔
نیوزی لینڈ کی مساجد پر حملے کے دوران دہشت گرد کو روکنے کی کوشش کرنے والے قابل فخر پاکستانی سپوت نعیم راشد نے اپنے بیٹے طلحہ نعیم کے ہمراہ جام شہادت نوش کیا تھا۔بین الاقوامی میڈیا نےبھی دہشتگردی کے دوران دوسروں کی جان بچاتے ہوئے شہید ہونے والے پاکستانی شہری نعیم راشد کو ہیرو قرار دیا ہے۔
پاکستانی سپوت نے اپنی جان بچانے کی کوشش نہیں کی بلکہ دوسروں کو محفوظ رکھنے کے لیے حملہ آور کو روکنے کی جستجو کی تھی۔
کرائسٹ چرچ حملے کے دوران ایبٹ آباد سے تعلق رکھنے والے پاکستانی نعیم رشید جرات و بہادری کا مظاہرہ کرتے ہوئے حملہ آور کے سامنے ڈٹ گئے اور انہیں آگے جانے سے روک دیا۔
ایک عینی شاہد کے مطابق اگر نعیم حملہ آور کو نہ روکتے تو حملے میں جانی نقصان بہت زیادہ ہو سکتا تھا کیونکہ حملہ آور النور مسجد کے عین وسط میں پہنچنے کی کوشش کر رہا تھا۔اپنی جان کی پروا نہ کرتے ہوئے بے مثال بہادری کا ثبوت دینے والے 66 سالہ نعیم کو سوشل میڈیا پر خراج تحسین پیش کیا جا رہا ہے۔
کرائسٹ چرچ حملے میں شہید ہونے والے پاکستانیوں کی تعداد 9 ہوچکی ہے۔ پولیس کمشنر کے مطابق ہسپتالوں میں زیرعلاج زخمیوں میں سے گیارہ کی حالت تشویشناک ہے۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے