چیئرپرسن اوگرا نےگیس کی قیمتوں میں 80 فیصد اضافہ کا عندیہ دیدیا

ویب ڈیسک : پیر 15 اپریل 2019

اسلام آباد : چیئرپرسن اوگرا عظمی عادل خان کا کہنا ہے گیس کی قیمتوں میں اضافہ ناگزیر ہے، 75 سے 80 فیصد اضافہ ہو سکتا ہے، نئی قیمتوں کا اطلاق یکم جولائی سے ہو گا۔
تفصیلات کے مطابق چیئرپرسن اوگرا عظمی عادل خان نے گیس قیمتوں میں اضافے پر فائیو اسٹار ہوٹل میں عوامی شنوائی کی، ایس این جی پی ایل اور مختلف طبقات کے نمائندوں نے اپنی معروضات پیش کیں۔
چیئرپرسن اوگرا کی یونین رہنماؤں کی طرف سے سیاسی بیان بازی پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے ہدایت کی کہ اوگرا کو سیاسی مقاصد کے لئے استعمال نہ کریں۔
عوامی شنوائی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چئیرپرسن اوگرا عظمی عادل خان کا کہنا تھا کہ گیس کی قیمتوں میں اضافہ ناگزیر ہے، قیمت خرید میں اضافہ ہوا ہے۔ گذشتہ دو سال سے گیس کی قیمتیں نہیں بڑھ سکیں۔ قیمت خرید اور فروخت میں فرق بڑھ گیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ 723 روپے فی ایم ایم بی ٹی یو گیس کی قیمت میں اضافہ مانگا گیا ہے، قیمتوں میں 75 سے 80 فیصد اضافہ ہو سکتا ہے، نئی قیمتوں کا اطلاق یکم جولائی سے ہو گا۔
عظمی عادل خان کا کہنا تھا سوئی ناردرن کے غیر ضروری اخراجات کو نہیں مانا جائے گا، ڈالر کی قیمت بڑھنا بھی ایک فیکٹر ہے، ایس این جی پی ایل کے دیوالیہ ہونے کا امکان نہیں ہے، حکومت ایسی کمپنیوں کو دیوالیہ نہیں ہونے دیتی۔
چیئرپرسن اوگرا نے کہا سردیوں میں اوور بلنگ کی وجہ چوتھا سلیب ریٹ اور پریشر فیکٹر تھا، کسی کو معاہدے سے ہٹ کر پریشر لگا ہے تو اسے ریفنڈ ملے گا۔ اوور بلنگ کے ذمہ داروں کا تعین وزیراعظم کی کمیٹی کرے گی۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے