عیدکافیصلہ رویت ہلال کمیٹی ہی کرے گی،اسلامی نظریاتی کونسل

قمری کیلنڈر کی شرعی حیثیت کا فیصلہ عید کے بعد ہوگا

ویب ڈیسک : منگل 28مئی 2019
اسلام آباد : چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل قبلہ ایاز نے واضح کیا ہے کہ قمری کیلنڈر اپنی جگہ لیکن قرآن و حدیث کے مطابق عید و رمضان کا اعلان چاند دیکھ کر ہوتا ہے، قمری کیلنڈر کی شرعی حیثیت کا فیصلہ عید کے بعد ہوگا۔
تفصیلات کے مطابق قمری کیلنڈرپروزیرسائنس ٹیکنالوجی اور علما کا اختلاف برقرار ہے، چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل قبلہ ایاز نے کہا قمری کلینڈر اسلامی نظریاتی کونسل کو مل گیا ہے اور اسلامی نظریاتی کونسل کا شعبہ تحقیق اس پر کام کررہا ہے۔قبلہ ایاز کا کہنا تھا حکومت نے جو کلینڈر بھیجا ہے اس سے پتہ چلے گا کہ چاند کب اور کہاں نکلے گا، دنیا میں ابھی تک کہیں بھی عید کا اعلان نہیں ہوا، طریقے کے تحت رویت کا باقاعدہ اہتمام ہونا چاہیے، قرآن و حدیث کے مطابق عید اور رمضان کا اعلان چاند کو دیکھ کر کرنا ہوتا ہے اور رویت کے ساتھ جدید آلات کا استعمال میں بھی کیا جاسکتا ہے۔
چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل نے کہاکہ عید کےچانداورروزے کیلئےرویت ضروری ہے، قمری کیلنڈر کی شرعی حیثیت کا فیصلہ عید کے بعد ہوگا ، شعبہ تحقیق اور علماء کی رائے کے باعث عید سے پہلے فیصلہ ممکن نہیں، طلب معاملہ ہے علماء کی رائے کے بغیر حتمی رائے نہیں دے سکتے۔چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل نے کہاکہ کیا حکومت نے رویت ہلال کمیٹی کو ختم کردیا ہے؟ کیا حکومت نے اس بات کی اجازت دیدی ہے کہ عید کا اعلان وزارت سائنس وٹیکنالوجی کرے گی؟
وزارتِ سائنس و ٹیکنالوجی کے بنائے ہوئے قمری کیلنڈر کو وفاقی کابینہ کے ایجنڈے میں شامل نہ کیا جاسکا،قوم کو عید کی تاریخ کے لیے رویتِ ہلال کمیٹی پر انحصار کرنا ہوگا- واضح رہے کہ وزیرِ سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے قمری کیلنڈر کی سمری کل وفاقی کابینہ کو بھجوائی تھی لیکن آج اسے وفاقی کابینہ کے اجلاس کے ایجنڈے میں شامل نہیں کیا گیا۔ قوم کو اب عید کی تاریخ کے لیے رویتِ ہلال کمیٹی پر انحصار کرنا ہوگاجبکہ قمری کیلنڈر کا معامل عید کے بعد زیرِغور آئے گا۔رویتِ ہلال کمیٹی پہلے ہی 4جون کو عید کا چاند دیکھنے کے لیے اجلاس بلا چکی ہے دوسری جانب فواد چوہسری نے بھی 5جون کو عید الفطر منائے جانے کا اعلان کر رکھا ہے۔
یاد رہے کہ وزیرِ سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے عیدین اور رمضان کا چاند دیکھنے کے لیے رویتِ ہلال کمیٹی ختم کر کے قمری کیلنڈر لانے کا اعلان کیا تھا جس کے بعد وزارتِ سائنس اورسپارکو کے ماہرین نے مل کر قمری کیلنڈر تیار کر لیا ہے اور ساتھ ہی اگلے 5 سال کی عیدوں کا اعلان بھی کیا تھا۔
انہوں نے کہا تھا کہ 5 سالہ قمری کلینڈر اسلامی نظریاتی کونسل کو بھجوا دیا ہے اور اسلامی نظریاتی کونسل اب تک ہمارے کام سے مطمئن ہے۔ایک سوال کے جواب میں فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ اسلامی نظریاتی کونسل نے مفتی منیب الرحمان اور مفتی شہاب الدین پوپلزئی کو بھی دعوت دی ہے۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے