مئی جاتے جاتے اپنا اثر دکھانے لگی،گرمی کی شدید لہرآگئی

اب طویل عرصے تک بارشیں نہیں ہوں گی

ویب ڈیسک : بدھ 29مئی 2019
لاہور : اب طویل عرصے تک بارشیں نہیں ہوں گی، محکمہ موسمیات نے گرمی کی خوفناک لہر کی پیش گوئی کر دی، مون سون سیزن میں تاخیر کے باعث گرمی کی شدید لہر آنے کا خدشہ ہے۔ تفصیلات کے مطابق محکمہ موسمیات نے پاکستان میں آئندہ چند ہفتوں کے دوران بیشتر علاقوں کے گرمی کی خوفناک لہر کی لپیٹ میں رہنے کی پیشن گوئی کی گئی ۔ آنے والے دنوں میں پنجاب کے میدانی علاقوں اور جنوبی پنجاب میں درجہ حرارت 45 ڈگری سینٹی گریڈ تک بھی پہنچ سکتا ہے۔
ماہ مئی کے بیشتر ایام کے دوران تو کبھی ہلکی اور کبھی تیز بارش کا سلسلہ چلتا رہا۔ اس کی وجہ سے موسم بھی قدرے ٹھنڈا رہا لیکن اب آنے والے دنوں میں بتدریج موسم گرم ہونے کی پیشگوئی کی گئی ہے۔
محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ صوبہ پنجاب کے میدانی علاقوں میں درجہ حرارت 45 ڈگری سینٹی گریڈ تک بھی پہنچ سکتا ہے۔ اب عیدالفطر پر بھی موسم گرم اور خشک رہنے کی توقع ہے۔ سندھ اور جنوبی پنجاب میں بھی شدید گرمی پڑے گی-محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ گرم علاقوں میں درجہ حرارت میں اضافہ ہو رہا ہے جبکہ شمالی حصوں میں موسم پہلے کی طرح نمدار رہنے کا امکان ہے۔محکمہ موسمیات کے مطابق سندھ کے بعض اضلاع بدین، سجاول، سانگھڑ، ٹھٹھہ، عمر کوٹ اور تھرپارکر 30 مئی تک بدستور معتدل خشک سالی کا شکار رہیں گے۔
موسم کا حال بتانے والوں کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ گرمی کی یہ شدید لہر کئی ہفتے تک جاری رہے گی۔ اس حوالے سے محکمہ موسمیات کی جانب سے جاری کردہ خصوصی رپورٹ کے مطابق اسلام آباد، لاہور، فیصل آباد، ملتان اور حیدر آباد گرمی کی لہر سے سب سے زیادہ اور شدید متاثر ہوں گے۔ جبکہ ہیٹ ویوز کے نشانے پر رہنے والے کراچی میں مجموعی طور پر زیادہ اثر نہیں پڑے گا۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران سب سے زیادہ درجہ حرارت سبی میں رہا۔ سبی میں 46، تربت میں 45، لسبیلہ،رحیم یارخان میں 44 اور نوکنڈی میں 40 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔ ملک کے کئی علاقوں میں گزشتہ دنوں ہونے والی بارشوں کے باعث گرمی کی شدت فی الحال کم ہے۔ تاہم آنے والے دنوں میں گرمی کی شدت میں اضافہ ہوگا۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے