رحیم یارخان:لیز پر دی گئی سرکاری اراضی کا ریکارڈ طلب

تحصیل انتظامیہ عوام کی شکایات اور مسائل کا ازالہ کرے،ڈپٹی کمشنر

ویب ڈیسک | 13جون 2019

رحیم یارخان : ڈپٹی کمشنر جمیل احمد جمیل نے سرکاری اراضی واگزار، قابضین کو بے دخل، ضلع میں تجاوزات کے خاتمہ سمیت عوام کو بنیادی سہولیات فراہم کرنے کی ہدایت کرتے ہوۓ سرکاری افسروں سے لیز پر دی گئی تمام سرکاری اراضی کا ریکارڈ طلب کرلیا، ڈپٹی کمشنر نے کہا کہاکہ اسسٹنٹ کمشنرز/ایڈ منسٹریٹرز سرکاری اراضی لیز پر دیئے جانے کے تمام معاہدے خود چیک کریں، تحصیل انتظامیہ مقامی لوگوں کی شکایات اورمسائل کا مقامی سطح پر ازالہ کرے، محکمہ مال کی کارکردگی بہتر اور سرکاری واجبات کی وصولی کو تیز کی جاۓ۔
یہ بات انہوں نے ڈپٹی کمشنر آفس کمیٹی روم میں منعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے کہی۔اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر (ریونیو)ڈاکٹر جہانزیب حسین لابر، اسسٹنٹ کمشنرز چوہدری اعتزاز انجم، فاروق قمر، کاشف ڈوگر، آصف اقبال سمیت چیف آفیسر میونسپل کمیٹیز و ضلع کونسل، انچارج اراضی ریکارڈ سنٹرز، ڈی او سپورٹس اشفاق احمد سمیت تمام ریونیو افسران شریک تھے۔

ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ بنیادی سہولتوں سے متعلق عوامی مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کے لئے موثر اقدامات کئے جائیں۔انہوں نے ضلع بھر میں ہاؤسنگ سوسائٹیز سے متعلق ریکارڈ تحصیل سطح پر مرتب کرنے کی ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ کسی بھی غیر قانونی ہاؤسنگ سوسائٹیز کو ضلع میں کام نہ کرنے دیا جائے جبکہ سرکاری زمینوں کا تحفظ، تجاوزات کو ختم اور ناجائز قابضین کو فوری بے دخل کیا جائے۔
انہوں نے ہدایت کی کہ تمام ریونیو افسران سرکاری واجبات کی وصولی میں تیزی لائیں اور نادہندگان کے خلاف کریک ڈاؤن کریں۔انہوں نے اسسٹنٹ کمشنرز کو ہدایت کی کہ وہ خود فیلڈ میں جائیں اور سرکاری واجبات ادا نہ کرنے والے عناصر کے خلاف کاروائیاں کریں جبکہ تمام اسسٹنٹ کمشنرز ریونیو افسران کی علاقہ سطح پر ریکوری رپورٹ روزانہ کی بنیاد پر ضلعی ہیڈ کواٹر ارسال کریں۔انہوں نے25جون سے قبل تمام ریکوری اہداف مکمل کرنے کی ہدایات جاری کیں جبکہ ضلع میں سپورٹس میلہ کے انعقاد کے لئے ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر(ریونیو) کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل دیتے ہوئے تمام اسسٹنٹ کمشنرز، چیف آفیسرز ضلع و میونسپل کمیٹیز کو ممبر اور ڈی او سپورٹس کو سیکرٹری نامزد کرتے ہوئے ہدایت کی کہ ضلع میں سپورٹس سرگرمیوں کو فروغ دینے کے لئے سپورٹس میلہ کا ضلع و تحصیل سطح پریکساں انعقاد کرایا جائے جس کے لئے کمیٹی اپنی سفارشات مرتب کرکے جلد آگاہ کرے۔اجلاس میں نہری پانی چوروں کے خلاف موثر کارروائی کے لئے اسسٹنٹ کمشنرز کو اپنا کردار ادا کرنے جبکہ نہری پانی کی چوری اور انہیں سہولت فراہم کرنے والے محکمہ انہار کے افسران وملازمین کے خلاف بھی کارروائی کرنے کی ہدایات جاری کی گئی۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے