بلاول کی جاتی امرا میں مریم نواز سے ملاقات

حکومت مخالف جدوجہد زور و شور سے جاری رکھنے پر اتفاق

ویب ڈیسک : اتوار 16جون 2019

لاہور: پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے جاتی امرا میں مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز سے ملاقات کی ہے۔مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز کی دعوت پر چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری جاتی امرا پہنچے ، ان کے ہمراہ قمر زمان کائرہ، چوہدری منظور، حسن مرتضی اور مصطفیٰ نواز کھوکھر کے علاوہ پیپلز پارٹی کی دیگر اعلیٰ قیادت بھی ہے۔ مسلم لیگ (ن) کی جانب سے مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب ، رانا ثنا اللہ، سردار ایاز صادق اور محمد زبیر موجود ہیں۔ مریم نواز نے جاتی امرا آمد پر بلاول بھٹوزرداری کا استقبال کیا۔ملاقات میں آصف زرداری، فریال تالپور اور حمزہ شہباز کی گرفتاری سمیت دیگر سیاسی امور اور اپوزیشن کی حکمت عملی پر بات چیت کی گئی جب کہ اس دوران بجٹ کے حوالے سے بھی معاملات زیر غور آئے۔
واضح رہے کہ بلاول بھٹو زرداری نے رمضان المبارک میں اپوزیشن جماعتوں کی قیادت کو دعوت افطار پر مدعو کیا تھا، جس میں مریم نواز بھی شریک ہوئی تھیں، یہ دونوں سیاسی رہنماؤں کے درمیان پہلی باضابطہ سیاسی ملاقات تھی۔ مریم نواز نے گزشتہ روز بلاول بھٹو زرداری کو ملاقات کی دعوت دی تھی جسے بلاول نے قبول کیا تھا۔مسلم لیگ(ن) کی نائب صدر مریم نواز اور پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کے درمیان ہونے والی ملاقات میں حکومت مخالف جدوجہد زور و شور سے جاری رکھنے پر اتفاق ہوا ہے۔ذرائع کے مطابق جاتی امرا میں ہونے والی ملاقات میں بجٹ سے متعلق مشترکہ عملی کیلیے اپوزیشن کی دیگر جماعتوں سے اعلیٰ سطحی رابطے برقرار رکھنے کا فیصلہ بھی کیا گیا۔نائب صدرمسلم لیگ ن کی خواہش پر آج ہونے والی ملاقات میں اس حکمت عملی پر بھی غور کیا گیا کہ عوام دشمن بجٹ کو منظور ہونے سے کیسے روکا جائے۔مریم نواز نے کہا کہ دونوں جماعتوں نے جمہوریت اور آئین کی بالادستی کے لئے بیش بہا قربانیاں دی ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ 10 ماہ میں ملک میں معاشی بحران ناقابل برداشت صورت حال اختیار کرچکا ہے۔سابق وزیراعظم نوازشریف کی صاحبزادی نے کھانے کی میز پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ آزاد عدلیہ کے اوپر نالائق اور جھوٹی حکومت کا حملہ کسی صورت قبول نہیں کیا جائے گا۔پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمیں بلاول بھٹو نے ملاقات کے دوران کہا کہ پھانسی سے ملک بدری اور جیلیں دیکھنے والی جماعتوں کو سلیکٹڈ حکومت ڈرا نہیں سکتی۔ ووٹ چور اور کٹھ پتلی حکومت عوام کی ترجمانی نہیں کرسکتی۔قبل ازیں جاتی امرا آمد پر مریم نواز اور لیگی رہنماؤں نے پی پی پی وفد کا استقبال کیا تھا۔پیپلز پارٹی کے رہنما قمر زمان کائرہ، چودھری منظور، حسن مرتضٰی اور مصطفٰی نواز کھوکھر بھی پارٹی چیئرمین کے ہمراہ ہیں۔ ن لیگ کی طرف سے راناثنااللہ، ایازصادق، محمدزبیر، پرویزرشید اورمریم اورنگزیب ملاقات میں شریک ہیں۔آج کی ملاقات مریم نواز کے کہنے پر ہوئی ہے جس کے لیے انہوں نے گزشتہ روز بلاول بھٹو زرداری سے رابطہ کرکے پی پی پی چیئرمین کو جاتی امرا آنے کی دعوت دی تھی۔واضح رہے کہ اس سے قبل گزشتہ ماہ رمضان شریف کےدور ان بلاول بھٹو زرداری کی طرف سے اپوزیشن جماعتوں کو دیے گئے افطار ڈنر میں دونوں رہنماؤں کی ملاقات ہوئی تھی۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے