وزیراعظم ہاؤس میں انجینئرنگ یونیورسٹی بنانے کی تجویز

ویب ڈیسک : جمعہ 21جون 2019

اسلام آباد: تحریک انصاف حکومت وزیراعظم ہاؤس میں اسلام آباد نیشنل یونیورسٹی بنانے کا منصوبہ ختم کر کے انجینئرنگ یونیورسٹی بنانے کی تجویز سامنے لے آئی۔ چئیرمین ایچ ای سی ڈاکٹر عطاالرحمن کو منصوبے کا ازسرنو جائزہ لینے کی ہدایت کر دی گئی جس پر متعلقہ حکام سر پکڑ کر بیٹھ گئے۔
نئے مالی سال کے دوران حکومت نے وزیراعظم ہاوس میں یورنیورسٹی بنانے کیلئے کوئی رقم مختص نہیں کی، یونیورسٹی کے قیام کیلئے ایچ ای سی کی فزیبلٹی رپورٹ، آرڈیننس اور پی سی ون تیار کیا گیا۔ جنوری میں یونیورسٹی منصوبے سے متعلق تقریب پر 3کروڑ روپے خرچ کیے گئے تاہم حسب معمول پی ٹی آئی حکومت نے یوٹرن لیتے ہوئے وزیراعظم ہاؤس میں یونیورسٹی بنانے کے معاملے کا ازسرنو جائزہ لینے کا فیصلہ کیا۔
چیئرمین ایچ ای سی عطاء الرحمان کو پہلا منصوبہ ختم کر کے حکومت نے نئے پر کام کرنے کی ہدایت کر دی جس پر ایچ ای سی حکام سر پکڑ کر بیٹھ گئے ۔اب وزیراعظم ہاؤس میں اسلام آباد نیشنل یونیورسٹی کی بجائےانجینئرنگ یونیورسٹی بنانے کی تجویز سامنے آئی ہے۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے