وزیراعظم کی اپوزیشن کے ساتھ میثاق معیشت کی منظوری

ویب ڈیسک : ہفتہ22جون 2019
اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے حزب اختلاف کے ساتھ میثاق معیشت کی منظوری دے دی ہے۔ذرائع کے مطابق ملک کو معاشی بحران سے نکالنے کے لئے میثاق معیشت کمیٹی بنانے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم نے اس اعلی سطحی پارلیمانی کمیٹی کے متعلق اسپیکر اسمبلی سے مشاورت کی ہے، میثاق معیشت کمیٹی میں سینیٹ اور قومی اسمبلی میں موجود تمام سیاسی جماعتوں کے اراکین شامل کئے جانے کا امکان ہے۔
میثاق معیشت کمیٹی بنانے کا مقصد یہ ہے کہ اس کے ذریعے سیاسی جماعتوں کے اہم رہنما ملکی معیشت میں بہتری کے لئے تجاویز دے سکیں۔اس موقع پر وزیراعظم نے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت پارلیمنٹ میں جمہوری اور اخلاقی اقدار کی پاسداری پر یقین رکھتی ہے۔اسد قیصر کا کہنا تھا کہ ان کے لیے ایوان کے تمام اراکین برابر ہیں، پاکستان کے عوام کی نظریں ہم پر لگی ہیں، قانون سازی کے ایجنڈے میں پیش رفت ضروری ہے۔واضح رہے کہ کمیٹی کے قیام کی تجویز حزب اختلاف کی جماعتوں نے دی تھی، شہباز شریف نے 19 جون کو ہونے والے قومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران پیش کش کی تھی کہ وہ پی ٹی آئی کے ساتھ میثاق معیشت کرنا چاہتے ہیں-اس موقع پر اسپیکر اسمبلی نے بھی اس تجویز کی حمایت کرتے ہوئے قائد حزب اختلاف کو یقین دہائی کرائی تھی کہ وہ اس حوالے سے حکومت سے بات کریں گے۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے