وزیراعظم کا 6ستمبر کو کشمیر ڈیفنس ڈے کے طور پر منانے کا فیصلہ

ویب ڈیسک : 04 ستمبر 2019
اسلام آباد : معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ وزیراعظم نے 6ستمبر کو کشمیر ڈیفنس ڈے کے طور پر منانے کا فیصلہ کیا ہے، ہم یوم دفاع کشمیر کے شہیدوں کے نام کرتے ہیں، کشمیریوں کے لیے ہر سطح پر آوازبلند کرتے رہیں گے۔
معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے اسلامک یونیورسٹی میں مقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورت حال سے متعلق سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کشمیری عوام ایک ماہ سےزائدعرصےسےکرفیومیں محصورہیں، اس وقت مواصلاتی نظام سےکٹےہوئےہیں، مقبوضہ وادی دنیا کی سب سے بڑی جیل میں تبدیل ہوگئی ہے ، جہاں ادویات اورخوارک نہیں، بچے بلک رہے ہیں۔فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا کہ بھارتی حکومت انسانیت کی تذلیل کررہی ہے، پاکستانی عوام کشمیری کی درد کو اپنا دکھ سمجھتے ہیں، کشمیری بین الاقوام تنظیموں کو حسرت سے دیکھ رہے ہیں، پاکستان نے بھارت کا فاشٹ چہرہ دنیا کودکھایا۔معاون خصوصی نے کہا عوام مسلم امہ کو درپیش مسائل کو سمجھتے ہیں، مظلوم کشمیری او آئی سی سے زیادہ توقع کرتا ہے ، کشمیر پاکستان کا دفاعی حصار ہے ، کشمیریوں کے لیے ہر سطح پر آوازبلند کرتے رہیں گے۔
ان کا کہنا تھا کہ بندوقوں کے سائے میں کشمیریوں کو گھروں میں قید کر دیا گیا، کشمیری اپنے خون سے داستان لکھ رہے ہیں، دنیا مقبوضہ کشمیر پر خاموش ہے۔فردوس عاشق اعوان نے کہا کشمیر میں خواتین کی حرمت پامال ہو رہی ہے، پاکستان کی بیٹیاں بھی کشمیری بیٹیوں کے دکھ کو محسوس کرتی ہے۔
معاون خصوصی برائے اطلاعات کا کہنا تھا کہ چھ ستمبر یوم دفاع اور شہیدوں کا دن ہے ، وزیراعظم نے 6ستمبر کوکشمیر ڈیفنس ڈے کے طور پر منانے کافیصلہ کیا ہے، ہم یوم دفاع کشمیر کے شہیدوں کے نام کرتے ہیں۔
انھوں نے مزید کہا کہ وزیراعظم جرات اوربہادری سےکشمیریوں کےوکیل بن کرسامنےآئے، کشمیریوں کوان کےگھروں میں قیداورزمین تنگ کردی گئی ہے، جمہوریت کا دعویدار اپنے ہی آئین کی خلاف ورزی کررہا ہے۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے