پنجاب میں مختلف کمپنیاں مضر صحت گھی اور تیل تیارکرنے لگیں

ویب ڈیسک : 22ستمبر 2019
لاہور: پنجاب فوڈ اتھارٹی نے صوبے بھر میں کام کرنے والی 317 تیل اور گھی کی کمپنیوں کے نمونوں کی رپورٹ جاری کردی، جس میں بتایا گیا کہ پنجاب میں موجود مختلف کمپنیاں مضر صحت گھی اور تیل تیار کررہی تھیں۔
تفصیلات کے مطابق پنجاب فوڈ اتھارٹی کی جانب سے کھانے میں استعمال ہونے والے تیل اور بناسپتی گھی کے لیے گئے نمونوں کی چیکنگ رپورٹ جاری کی گئی۔رپورٹ کے مطابق 317 میں سے 47 برانڈ مضر صحت، 56 کمپنیوں کے نمونوں میں معمولی نقائص پائے گئے، مختلف برانڈز کا 68ہزار 120کلوگھی اور غیرمعیاری تیل تلف کیا گیا۔
پنجاب فوڈ اتھارٹی نے تما م برانڈ زکے تفصیلی نتائج اپنی ویب سائٹ پر اپ لوڈ کیے ہیں، نمونےپاس ہونےتک کسی بھی برانڈکوپروڈکشن کی اجازت نہیں دی جائے گی۔رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ شیڈول کے مطابق سال میں 2بار تیل اورگھی کےنمونےچیک کیےجاتےہیں، سالانہ سیمپلنگ شیڈول کے علاوہ سرپرائز چیکنگ بھی کی جاتی ہے۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے