گونگے اور بہرے افراد کوگاڑی چلانے کی اجازت دینے کا فیصلہ

ویب ڈیسک : 22ستمبر 2019
لاہور: پنجاب حکومت نے گونگے اور بہرے افراد کو قانون میں ترمیم کرکےگاڑی چلانے کی اجازت دینے کا فیصلہ کرلیا۔تحریک انصاف کی رکن اسمبلی سعدیہ سہیل رانا کی جانب سے موٹر وہیکل ایکٹ میں ترمیم کےلئےپنجاب اسمبلی میں بل پیش کیا گیا، جس کے تحت موٹر وہیکل ایکٹ میں ترامیم کی جاری ہیں، ترامیم کے بعد قوتِ سماعت وگویائی نہ رکھنے والے افراد کو گاڑی چلانے کیلئے اجازت دی جائے گی اور انہیں ٹریفک پولیس کی جانب سے ڈرائیونگ لائسنس جاری ہوں گے۔قانون میں ترامیم کے بعد 50 ہزار کے قریب افراد فائدہ اٹھا سکیں گے، بتایا گیا ہے شہری حلقوں کی جانب سے قانون میں ہونیوالی ترامیم کو سراہا گیا ہے۔
دنیا میں بہت سے ممالک میں خصوصی افراد کو گاڑی چلانے کی اجازت دی جا چکی ہے، پاکستان میں اس قسم کے قوانین میں ترامیم وقت کی اہم ضرورت تھی۔
ترمیمی بل قائمہ کمیٹی نے منظور کرلیا جوپنجاب اسمبلی کے آئندہ اجلاس میں پیش ہوگا۔ ترمیم کے بعد خصوصی افراد کولائسنس دیا جائے گا۔قانون میں ترمیم کے بعد 50 ہزار افراد اس سے مستفید ہو سکیں گے۔ قانون میں ترمیم کے بعد قوت سماعت اور قوت گویائی سے مرحوم افراد کو گاڑی چلانے کا لائسنس دیا جائے گا۔سعدیہ سہیل رانا کے مطابق ترمیمی بل کو قائمہ کمیٹی نے منظور کر لیا ہے جسے پنجاب اسمبلی کے آئندہ اجلاس میں منظوری کےلئے پیش کیا جائے گا۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے