کپتانی کے لیے مکمل طور پر تیار ہوں،اظہرعلی

ویب ڈیسک : 18اکتوبر2019
لاہور:قومی ٹیسٹ ٹیم کے نئے کپتان اظہر علی کا کہنا ہے کہ وقت بہت کچھ سکھاتا ہے اور ٹیم کی کپتانی کے لیے مکمل طور پر تیار ہوں۔لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے اظہر علی کا کہنا تھا کہ سرفراز احمد کی پاکستان کے لیے بہترین خدمات ہیں اور انہیں میری مکمل حمایت حاصل ہے۔اظہر علی نے کہا کہ میں نے کپتانی کو مثبت انداز میں قبول کیا ہے اور پاکستان کے لیے کپتانی فخر کی بات ہے۔
انہوں نے کہا کہ کپتانی لینا میرے لیے کوئی مشکل کام نہیں تھا لیکن کپتانی کا انحصار پوری ٹیم کی کارکردگی پر ہوتا ہے، نئے کھلاڑی اور نیا سیٹ اپ بلا خوف کھیلتا ہے۔
قومی ٹیسٹ ٹیم کے کپتان نے کہا کہ ٹیسٹ چیمپئن شپ میں کوئی آسان ٹیم نہیں ہے اور آسٹریلیا کا آسٹریلیا میں مقابلہ بھی کسی چیلنج سے کم نہیں ہے لیکن ہم اس چیلنج کے لیے مکمل طور پر تیار ہیں۔
ان کا کہنا ہے کہ جہاں ٹیم کو میری ضرورت ہو گی اس نمبر پر کھیلوں گا، کپتانی شارٹ ٹرم نہیں، اتنا وقت ہے کہ اپنی کارکردگی دکھا سکوں۔قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ سے متعلق سوال پر اظہر علی نے کہا کہ مصباح کے ساتھ 7، 8 سال کرکٹ کھیلا ہوں ان کے ساتھ اچھی ہم آہنگی ہے، ہیڈ کوچ کے ہی چیف سلیکٹر ہونے سے بھی آسانی ہو گی۔
قومی ٹیسٹ ٹیم میں عامر اور وہاب ریاض کی عدم موجودگی سے متعلق سوال پر اظہر علی نے کہا کہ دونوں اچھے بولر ہیں لیکن وہ اب دستیاب ہیں، ان سے فرق تو پڑے گا۔

ادھر پاکستان کرکٹ ٹيم کے سابق کپتان سرفراز احمد کپتانی کے تینوں فارمیٹ سے ہٹائے جانے کے بعد نئے ٹيسٹ کپتان اظہرعلی اور نئے ٹی 20 کپتان بابراعظم کے ليے نيک خواہشات اور تمناؤں کا اظہار کيا ہے۔
اپنے بیان میں سرفراز احمد کا کہنا ہے کہ پاکستان کی قيادت کرنا ايک اعزاز کي بات تھی۔ اپنی کپتانی ميں ہميشہ پاکستان کوبلندی پرلےجانےکی کوشش کی۔سرفراز احمد نے ان پراعتماد کرتے ہوئے کپتانی سونپنے پر سليکٹرز اور کوچز سميت پاکستان کرکٹ بورڈ کا بھی شکريہ ادا کیا۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے