سندھ میں خواجہ سرائوں کو سرکاری نوکری ملے گی،کوٹہ مقرر

ویب ڈیسک : 23اکتوبر2019
کراچی: سندھ کابینہ نے خواجہ سرائوں کیلئے تمام سرکاری اداروں میں 0.5 فیصد نوکریوں کا کوٹا مقرر کرنے کی منظوری دے دی ہے۔
ذرائع کے مطابق وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے خواجہ سرا برادری کو سرکاری نوکریوں کی درخواست دینے کیلئے کاغذات تیار رکھنے کی ہدایت کر دی ہے۔وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا ہے کہ میں خواجہ سرا برادری کو قومی دہارے میں لا کر انہیں معاشرے کے کارآمد لوگوں میں شامل کرنا چاہتا ہوں۔
یاد رہے گزشتہ ہفتے سندھ حکومت نے پولیس میں غازی اہلکاروں کو پیکج اور خواجہ سراؤں کو نوکریاں دینے کا فیصلہ کیا تھا۔وزیراعلی سندھ فیصلے کے مطابق جرائم پیشہ افراد کے ساتھ مقابلوں اور دیگر واقعات میں معذور ہونے والے اہلکاروں کو پیکج کے ساتھ ملازمت بھی دی جائے گی ۔ان کا کہنا تھا کہ سندھ میں غازی پولیس اہلکاروں کی تعداد دو سو ہے ۔ انہوں نے قوم کی حفاظت کے خاطر قربانی دی ۔ ان کی قربانیوں کو نظرانداز نہیں کر سکتے ۔
مراد علی شاہ نے کہا کہ پولیس میں 28 ہزار کانسٹیبل کی سیٹیں خالی ہیں ان آسامیوں کو پُرکیا ہے جبکہ پولیس میں باقائدہ سلیکشن سینٹر کے قیام کی ہدایت بھی کی ۔وزیراعلی سندھ نے خواجہ سراؤں کو سرکاری نوکریوں میں مخصوص کوٹہ دینے کا فیصلہ بھی کیا اورکہا خواجہ سراؤں کو قومی دھارے میں لانے کے لیے ان کو ملازمتی کوٹا دینا ضروری ہے ۔
اجلاس میں جامشورو، دادو، ٹھٹہ اور سجاول پر مشتمل پولیس رینج قائم کرنے کا فیصلہ بھی کیا گیا۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے