وفاقی بجٹ سے عوام کو مایوسی ہوئی:ملک مظہر پہوڑ

رحیم یارخان(نمائندہ قافلہ نیوز) وفاقی بجٹ کو پیپلزپارٹی مسترد کرتی ہے،بجٹ نے عوام کو مایوس کیا، کسانوں،کاشتکاروں، مزدوروں اورسرکاری ملازمین کے لیے کوئی مراعات نہیں رکھی گئیں،مہنگائی میں مزید اضافہ ہوگا۔بجٹ سے حکومت کی نااہلی کھل کرسامنے آگئی ہے۔ان خیالات کااظہارضلعی جنرل سیکرٹری پیپلز پارٹی مظفرگڑھ ملک مظہر پہوڑ ایڈووکیٹ نے بجٹ سیشن میں محترمہ بے نظیر بھٹو کی صاحبزادیوں بختاور بھٹو اورآصفہ بھٹو سے ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہاکہ پیپلز پارٹی دور حکومت میں جب سید یوسف رضا گیلانی وزیراعظم پاکستان اور آصف علی زرداری صدر پاکستان تھے توایک سو بیس فیصد (120) ملازمین کی تنخواہوں میں اضافہ کیا،مسلم لیگ ن کے دورحکومت میں صرف ساٹھ فیصد جبکہ پی ٹی آئی کے دوسالوں میں صرف دس فیصد اضافہ ھوا جبکہ مہنگائی کا طوفان ھے یہ بجٹ کسان دشمن۔ مزدور دشمن۔ ملازمین دشمن۔ تاجر دشمن۔ صنعتکار دشمن ہے۔بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کا نام تبدیل کرکے احساس کفالت کا نام دیکر بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کی رقم تقسیم کی گئی مگر عوام کے دلوں سے یہ نام نہیں مٹایا جا سکتا۔کرونا وائرس اور ٹڈی دل نااہل حکمرانوں کے کنٹرول سے باہر ہو گیا ہے۔ ابھی گندم کی فصل کا سیزن جاری ہے مگر ان کی نااہلی اوراپنے مافیا کی وجہ سے گندم اور آٹا غائب ہو گیا ہے۔ پٹرول سستا ہونے پر پٹرول پمپس سے غائب ہو گیا۔عوام ان کی تلاش میں مارے مارے پھرتے ہیں۔ رکشے والے اور چھوٹے مزدور روزی سے محروم ہوگئے ھیں اور حکمرانوں کی نااہلی پر ماتم کررھے ھیں کرونا کی وجہ سے حکمرانوں نے عوام کو بجلی اور گیس کے بلوں میں رعایت دینے کا وعدہ کیا تھا مگر اب اس وعدے سے مکر گئے اور انکے ھزاروں اور لاکھوں کے بل آگئے۔ مہنگائی پرکوئی کنٹرول نہیں ۔ضروریات زندگی کی اشیاء سبزی گوشت فروٹ سمیت عوام کی پہنچ سے دور ھو گئے۔ یوں لگتا ھے جیسے ملک میں حکومت نام کی کوئی چیز نہیں جبکہ پیپلز پارٹی کے دور حکومت میں کسان مزدور تاجر ملازمین صنعتکار وغیرہ سب خوشحال تھے۔اورآج تمام طبقات کے لوگ صدر آصف علی زرداری اور وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی کے دورحکومت کویادکرکے دعائیں دیتے ہیں۔

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے